اسرائیل کا خفیہ ادارہ موساد پروفیسر البطش کا قاتل ہے: اسماعیل ہنیہ - خیبر

اسرائیل کا خفیہ ادارہ موساد پروفیسر البطش کا قاتل ہے: اسماعیل ہنیہ

۰۳ اردیبهشت ۱۳۹۷ ۱۶:۰۸

ہنیہ نے کہا کہ فادی البطش پہلے عرب سائنسدان تھے جنہوں نے سائنس اور کائنات کی معرفت کے حوالے سے ملائیشیا کے وزیراعظم کے ہاتھ سے ایوارڈ وصول کیا۔

خیبر صیہون ریسرچ سینٹر: اسلامی تحریک مزاحمت ’حماس‘ کے سیاسی شعبے کے سربراہ اسماعیل ھنیہ نے گذشتہ روز ملائیشیا میں نامعلوم افراد کے حملے میں مارے جانے والے فلسطینی سائنسدان اور پروفیسر کے قتل کی ذمہ داری صہیونی ریاست اور اس کے بدنام زمانہ خفیہ ادارے ’موساد‘ پر عاید کی ہے۔ان کا کہنا ہے کہ اسرائیل کے علاوہ پروفیسر البطش کا اور کوئی دشمن نہیں ہوسکتا۔
اسماعیل ہنیہ نے بتایا کہ جماعت کا ایک وفد ملائیشیا پہنچ چکا ہے جو ملائیشن قیادت سے ملاقاتوں کے دوران اس واقعے کی تحقیقات کے حوالے سے بات چیت کرے گا۔

ہنیہ نے کہا کہ فادی البطش پہلے عرب سائنسدان تھے جنہوں نے سائنس اور کائنات کی معرفت کے حوالے سے ملائیشیا کے وزیراعظم کے ہاتھ سے ایوارڈ وصول کیا۔

ان کے قتل سے فلسطینی قوم ہی نہیں بلکہ عرب اور اسلامی دنیا ایک با صلاحیت سائنسدان سے محروم کردی گئی ہے۔

خیال رہے کہ فلسطینی سائنسدان ڈاکٹر فادی البطش کو ہفتے کو علی الصباح کولالمپور میں نماز فجر کے وقت نامعلوم افراد نے گولیاں مار کر شہید کردیا تھا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۰۰۳

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=1558

تبصرہ کریں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے