بیت المقدس عالم اسلام کا دائمی ثقافتی دارالخلافہ: آو آئی سی - خیبر

بیت المقدس عالم اسلام کا دائمی ثقافتی دارالخلافہ: آو آئی سی

03 دسمبر 2018 13:40

مسلمان ممالک کے وزراء ثقافت کا منامہ میں خصوصی اجلاس منعقد ہوا جس میں بیت المقدس کو اسلامی ثقافتی دارالحکومت قرار دیا گیا۔ اجلاس میں بیت المقدس کی ثقافت اور تہذیب کے تحفظ کے لیے فوری اقدامات کی ضرورت پر بھی زور دیا گیا۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، اسلامی تعاون تنظیم ‘او آئی سی’ کے زیر اہتمام خلیجی ریاست بحرین کے دارالحکومت منامہ میں منعقدہ اسلامی ثقافتی کانفرنس میں مقبوضہ بیت المقدس کو عالم اسلام کا دائمی ثقافتی دارالخلافہ قرار دیا گیا ہے۔

مسلمان ممالک کے وزراء ثقافت کا منامہ میں خصوصی اجلاس منعقد ہوا جس میں بیت المقدس کو اسلامی ثقافتی دارالحکومت قرار دیا گیا۔ اجلاس میں بیت المقدس کی ثقافت اور تہذیب کے تحفظ کے لیے فوری اقدامات کی ضرورت پر بھی زور دیا گیا۔

کانفرنس سے خطاب میں او آئی سی کی سائنسی وثقافتی کمیٹی “آئسیسکو” کے ڈائریکٹر جنرل عبدالعزیز التویجری نے کہا کہ القدس کو صہیونی ریاست کی منظم سے منظم تہذیبی اور ثقافتی یلغار کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اسرائیل ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت القدس کی اسلامی تہذیب وثقافت کی علامات مٹا رہا ہے۔ عالم اسلام بالخصوص ‘و آئی سی’ کے ارکان ممالک کو القدس کی تہذیب و ثقافت کےتحفظ کے لیے موثر اقدامات کرنا ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ القدس کو اسلامی دنیا کا ثقافتی دارالحکومت قرار دینا اہم پیش رفت اور القدس کے حوالے سے او آئی سی کے فیصلوں کا حصہ ہے۔

خیال رہے کہ اسلامی تعاون تنظیم نے ایسے حال میں منامہ میں منعقدہ اسلامی ثقافتی کانفرنس میں بیت المقدس کے حوالے سے بات کی ہے عرب ریاستیں صہیونی ریاست سے اپنے تعلقات معمول پر لانے کی مساعی میں مصروف عمل ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد؍خ؍۱۰۰۰۳

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=15815

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے