جروزلم پوسٹ: اسرائیل کو اپنے تحفظ کے لیے یمن جنگ میں سعودی اتحاد کا ساتھ دینا ہو گا - خیبر

جروزلم پوسٹ: اسرائیل کو اپنے تحفظ کے لیے یمن جنگ میں سعودی اتحاد کا ساتھ دینا ہو گا

12 ستمبر 2018 18:02

اسرائیلی اخبار نے انصار اللہ کو اسرائیل کی سالمیت کے لیے ایک بڑا چیلنج قرار دے کر صہیونی ریاست کو یمن کے خلاف جاری جنگ میں مداخلت اور سعودی اتحاد کا ساتھ دینے کا مشورہ دیا ہے۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، اسرائیلی اخبار ’جروزلم پوسٹ‘ نے اپنی ایک یادداشت میں لکھا ہے کہ اسرائیل کو یمن جنگ میں سعودی اتحاد کا ساتھ دینا ہو گا چونکہ اسرائیل کی مداخلت نہ صرف یمن میں ایران کے نفوذ کو کم کرنے میں موثر ثابت ہو گی بلکہ خلیج فارس کی عرب ریاستوں کے ساتھ تعلقات بڑھانے میں بھی ایک طاقتور کردار ادا کر سکے گی۔

اس اخبار نے ان مفادات جو جنگ یمن میں اسرائیل کو حاصل ہو سکتے ہیں کی طرف نیتن یاہو کی عدم توجہ کو ایران مخالف سعودی اتحاد کے ساتھ تعاون کی بہترین فرصت کے کھو جانے کے مترادف قرار دیا۔

جروزلم پوسٹ نے اس بات کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہ یمن کے مغربی علاقے میں انصار اللہ اور حوثیوں کا تسلط اسرائیل کی سالمیت کے لیے ایک بڑا چیلنج ہے لکھا: عبد الملک الحوثی نے گزشتہ مارچ کے مہینے میں یہ وعدہ دیا تھا کہ وہ حزب اللہ لبنان کے شانہ بشانہ اسرائیل کے خلاف ممکنہ جنگ میں لڑیں گے۔۔۔۔ حوثی بیلسٹک میزائل کی ٹیکنالوجی کو استعمال کرنے میں بہت مہارت رکھتے ہیں اور یہ خود اسرائیل کے خلاف مزید چیلنج ہے۔

اس اخبار نے مزید دعویٰ کیا ہے کہ انصار للہ کا اس خطرناک ٹیکنالوجی کو حاصل کرنا یمن کے مغربی علاقے کو اسرائیل پر میزائل داغنے کے لیے ایک پلیٹ فارم میں تبدیل کر سکتا ہے، اور یہ چیلنجز اسرائیل کی توجیہ کے لیے کافی ہیں کہ وہ یمنیوں کے خلاف جاری سعودی جنگ میں سعودی اتحاد کا ساتھ دے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/ب۱۰۰۰۳

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=11768

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے