جھوٹے چرواہے کی ایران مخالف شرانگیزیاں شکست سے دوچار - خیبر

جھوٹے چرواہے کی ایران مخالف شرانگیزیاں شکست سے دوچار

30 ستمبر 2018 18:18

غاصب صیہونی حکومت کے وزیر اعظم نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس میں ایک بار پھر ایران کے خلاف ڈرامہ بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے بے بنیاد دعوؤں کا اعادہ کیا ہے۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، صیہونی ریاست کے کرپٹ وزیر اعظم ’’نیتن یاہو‘‘ نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ایران کے خلاف نئی ڈرامہ بازی کا مظاہرہ کیا اور بعض تصاویر دکھاتے ہوئے یہ جھوٹا دعویٰ کیا کہ یہ تصاویر تہران کے قریب واقع ایٹمی مواد کے خفیہ گوداموں کی ہیں۔

رپورٹ کے مطابق کرپشن کے الزامات میں مقدمات کا سامنا کرنے والے صیہونی حکومت کے وزیراعظم نے اسرائیل کے پاس موجود سینکڑوں ایٹم بموں کی جانب کوئی اشارہ کیے بغیر دعویٰ کیا کہ ان گوداموں میں ایٹمی ہتھیاروں کی تیاری کا خفیہ پروگرام چلایا جا رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق نیتن یاہو نے آئی اے ای اے پر شدید برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ اسرائیل نے بقول ان کے ایران کے خفیہ ایٹمی گوداموں کی معلومات جوہری توانائی کی عالمی ایجنسی کو فراہم کر دی ہیں اس نے اسرائیل کی فراہم کردہ معلومات پر کوئی توجہ نہیں دی۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ یہ پہلی بار نہیں ہے کہ جب اسرائیل کے وہمی مزاج وزیر اعظم نے تصاویر اور پینٹنگ دکھا کر ایران اور اس کی پرامن ایٹمی سرگرمیوں کے بارے میں منفی پروپیگنڈہ مہم شروع کی ہو بلکہ فلسطینی بچوں کی قاتل غاصب صیہونی حکومت کے کرپٹ وزیراعظم نے تیس اپریل کو بھی ایران کے خلاف ایسے ہی ایک ناٹک کے دوران کچھ تصاویر، سی ڈیز اور کاغذات دکھاتے ہوئے دعویٰ کیا تھا کہ ایران ایٹمی ہتھیار بنانے کا خفیہ پروگرام چلا رہا ہے۔

رپورٹ کے مطابق چھہ سال پہلے بھی نتن یاہو نے اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے سامنے پینٹنگز بنا کر دعویٰ کیا تھا کہ ایران ایٹم بم بنانے کے قریب پہنچ گیا ہے اور غور طلب بات یہ ہے کہ اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی میں نیتن یاہو کے ایران مخالف ناٹک پر صرف امریکی اور اسرائیلی اہلکاروں نے تالیاں بجا کر اس کا خیر مقدم کیا تھا۔

قابل ذکر ہے کہ ایران کے وزیر خارجہ ڈاکٹر محمد جواد ظریف نے اسرائیلی وزیر اعظم کے نئے ناٹک کے بعد اپنے ایک ٹوئٹ میں لکھا ہے کہ کوئی بھی ڈرامہ اور شعبدہ بازی اس حقیقت کو نہیں چھپا سکتی کہ خطے میں صرف صیہونی حکومت ہی وہ واحد حکومت ہے جو خفیہ اور غیر اعلان شدہ ایٹمی پروگرام چلا رہی ہے اور اس کے گودام ایٹم بموں سے بھرے پڑے ہیں۔

واضح رہے کہ ایران کے وزیر خارجہ کے بقول نیتن یاہو جھوٹا چرواہا ہے اور اس کی حیثیت ہی کیا ہے جو وہ دوسرے ملکوں کے پرامن ایٹمی پروگرام پر انگلیاں اُٹھائے۔

نیوز نور

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۰۰۳

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=12582

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے