سی آئی اے کے افیسر بھی موساد کی ابابیلوں کے پنجے میں - خیبر

یہودی ریاست کی جاسوس چڑیاں (۵)

سی آئی اے کے افیسر بھی موساد کی ابابیلوں کے پنجے میں

03 جولائی 2018 12:36

بدنام زمانہ امریکی یہودی ادارے آیپیک کے ساتھ بھی اس کے تعلقات کسی سے ڈھکے چھپے نہیں ہیں اور اس کے مقبوضہ فلسطین کے دوروں کے بارے میں شائع ہونے والی رپورٹوں میں بھی امریکی ذرائع ابلاغ نے اس کے موساد کے ساتھ تعلقات کے سلسلے میں قیاس آرائیاں کی ہیں۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ: بارک اوباما کے دوسری بار صدر امریکہ منتخب ہونے کے چند ہی روز بعد ایک دھماکہ خیز خبر نے وائٹ ہاؤس کو حیرت میں ڈبو دیا اور وہ یہ کہ “سی آئی اے کے ڈائریکٹر جنرل، جنرل ڈیوڈ پیٹراس (General David Petraeus) نے اخلاقی رسوائی اور اپنی بیوگرافی رائٹر پاولا براڈویل (Paula Broadwell) یا پاولا ڈین کرانز (Paula Dean Kranz) کے ساتھ ناجائز تعلقات اور اپنی بیوی کے ساتھ خیانت کی بنا پر اپنے عہدے سے اسعتفیٰ دیا۔

۴۵ سالہ پاولا براڈویل ڈاکوٹا کی ملٹری یونیورسٹی کی فارغ التحصیل ہے۔ ۲۳ سال کی عمر میں امریکی فوج کے انٹیلی جنس کے شعبے میں سرگرم عمل ہوئی۔ جنرل پیٹراس مشرق وسطی اور شمالی افریقہ میں امریکی افواج کے کمانڈر مقرر ہوئے تو براڈویل (کرانز) سے بھی شناسائی اور رابطوں کا آغاز ہوا۔ (پاولا براڈویل کا اصل خاندانی نام “کرانز” ہے اور کرانز امریکی یہودیوں کے درمیان مشہور نام ہے) پیٹراس کا شمار ایک فوجی افسر کی حیثیت سے امریکیوں کے ہر دلعزیز افسروں میں ہوتا ہے۔

عراق اور افغانستان کے خلاف امریکی جنگوں کے دوران پاولا مشرق وسطی میں اعلی امریکی فوجی عہدیدار کے طور پر تعینات تھی اور اسی منصب کی آڑ میں وہ کئی مرتبہ مقبوضہ فلسطین بھی گئی۔ اگرچہ موساد کے ساتھ پاولا کے تعلق کے سلسلے میں کوئی سند و ثبوت موجود نہیں ہے لیکن اس میں شک نہيں ہے کہ وہ ایک یہودی ہے اور امریکہ میں اعلی یہودی شخصیات کے ساتھ بھی اس کا آنا جانا رہا ہے۔ بدنام زمانہ امریکی یہودی ادارے آیپیک کے ساتھ بھی اس کے تعلقات کسی سے ڈھکے چھپے نہیں ہیں اور اس کے مقبوضہ فلسطین کے دوروں کے بارے میں شائع ہونے والی رپورٹوں میں بھی امریکی ذرائع ابلاغ نے اس کے موساد کے ساتھ تعلقات کے سلسلے میں قیاس آرائیاں کی ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

جاری/ی/ت/۱۰۰۰۱

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=7122

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے