غزہ پر اسرائیلی پابندیوں کے باعث بچوں کی اموات میں خطرناک اضافہ - خیبر

غزہ پر اسرائیلی پابندیوں کے باعث بچوں کی اموات میں خطرناک اضافہ

09 اکتوبر 2018 11:28

ڈاکٹر ناصر بلبل نے کہا کہ اسرائیل کی طرف سےعائد کردہ پابندیوں کے نتیجے میں ہر ماہ پانچ سے دس بچے موت کے منہ میں‌چلے جاتے ہیں۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، فلسطین کے علاقے غزہ کی پٹی پر اسرائیل کی طرف سے عائد کردہ اقتصادی پابندیوں کے باعث بچوں کی اموات میں بے حد اضافہ سامنے آیا ہے۔ مقامی حکام کا کہنا ہے کہ ناکہ بندی کے باعث اسپتالوں میں علاج کی سہولیات محدود ہیں اور ادویات کا فقدان ہے جس کے نتیجے میں ہر ماہ پانچ سے دس بچے علاج کی سہولت نہ ملنے کے باعث لقمہ اجل بن جاتے ہیں۔

غزہ میں الشفاء میڈیکل کمپلیکس میں شعبہ اطفال کے ڈائریکٹر ڈاکٹر ناصر بلبل نے کہا کہ اسرائیل کی طرف سےعائد کردہ پابندیوں کے نتیجے میں ہر ماہ پانچ سے دس بچے موت کے منہ میں‌چلے جاتے ہیں۔

ڈاکٹر بلبل نے کہا کہ غزہ کے تمام اسپتالوں میں بچوں کی ادویات میں کمی آگئی ہے۔ بچوں کو نہ صرف ادویات کی کمی کا سامنا ہے بلکہ بچوں کو مناسب طبی سہولیات کا فقدان ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ الشفاء کمپلیکس میں بچوں کے لیے آکسیجن کا سسٹم معطل ہے۔ اسپتال کی انتظامیہ کی بھی کمی ہے۔ کمپلیکس کو چھ ڈاکٹروں اور ۲۰ سے۲۴ نرسوں کی اشد ضرورت ہے جب کہ بچوں کے وارڈ میں ۲۰ سے ۲۵ افراد کی ضرورت ہے۔

مرکز اطلاعات فلسطین

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۰۰۳

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=12996

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے