غزہ کے عوام پر المناک پابندیاں تاریخ کا بدترین ظلم ہے: خطیب مسجد اقصیٰ - خیبر

غزہ کے عوام پر المناک پابندیاں تاریخ کا بدترین ظلم ہے: خطیب مسجد اقصیٰ

29 اگست 2018 13:54

خطیب الشیخ عکرمہ صبری نے کہا ہے کہ غزہ کے عوام جنگ بندی کو عملی جامہ پہنانے، خون خرابہ روکنے اور غزہ کا محاصرہ اٹھانے کا غیر مشروطہ مطالبہ کرتے ہیں۔

خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، مسجد اقصیٰ کے امام نے کہا ہے کہ غزہ کے محصور عوام کا مفاد جنگ بندی کو عمل شکل دینے، خون خرابہ روکنے، محاصرہ اٹھانے اور عوام پر عاید کردہ پابندیاں مکمل طور غیر مشروط طور پر ختم کرنے میں ہے۔

خبر رساں ادارے’شہاب‘ کو دیے گئے ایک انٹرویو میں الشیخ صبری نے کہا کہ غزہ کی پٹی کے عوام پر عاید کردہ پابندیاں فوری اٹھانے کی ضرورت ہے۔ کسی ایک گروپ کی وجہ سے غزہ کے عوام اور پوری فلسطینی قوم کو سزا دینے کا کوئی جواز نہیں۔

اُنہوں نے مزید کہا کہ فلسطینی اتھارٹی کی طرف سے غزہ کی پٹی پر پابندیاں قومی مفاہمت کی پالیسی کے متضاد ہیں۔ جو مصالحت چاہتے ہیں وہ غزہ کے عوام پر عاید کردہ پابندیاں فوری اٹھائیں اور غزہ کے عوام کو آزاد کرائیں۔

خطیب مسجد اقصیٰ کا کہنا تھا کہ دین اسلام ہمیں کسی انسان کو بے قصور ہونے پر اسے سزا دینا نہیں سکھاتا۔ غزہ کے عوام پر پابندیاں المناک اور تاریخ کا بدترین ظلم ہے۔ ہمیں عوام کے کسی طبقے کو ظلم، خطرات اور پابندیوں میں متبلا نہیں کرنا چاہیے۔

منبع: مرکز اطلاعات فلسطین

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/ب/۱۰۰۰۳

 

  • facebook
  • googleplus
  • twitter
  • linkedin
لینک خبر : https://kheybar.net/?p=10981

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے