غزہ پر صہیونی محاصرہ، ۸ فلسطینی مریض زندگی کی بازی ہار چکے




غزہ پر اسرائیلی پابندیوں کے باعث اب تک ۸ فلسطینی مریض زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔ ان میں سے تین فلسطینی مریض رواں سال کے دوران فوت ہوئے۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، غزہ کی پٹی پر صہیونی ریاست کی جانب سے جاری محاصرے نتیجے میں فلسطینی شہری علاج کی سہولت سے محرومی کے باعث زندگی کی بازی ہار رہے ہیں۔ ایک رپورٹ کے مطابق اسرائیلی پابندیوں کے باعث اب تک ۸ فلسطینی مریض زندگی کی بازی ہار چکے ہیں۔ ان میں سے تین فلسطینی مریض رواں سال کے دوران فوت ہوئے۔

مرکز برائے انسانی حقوق کی طرف سے جاری کردہ رپورٹ کے مطابق غزہ کی پٹی کے مریضوں کے بیرون ملک علاج پر اسرائیلی پابندیاں بدستور برقرار ہیں جس کے نتیجے میں غزہ میں لا علاج کیے گئے فلسطینی مریض زندگی کی بازی ہار رہے ہیں۔ رواں سال بھی ایسے ہی تین مریض دم توڑ گئے۔ ڈاکٹروں نے انہیں غزہ کی پٹی سے باہر لے جانے کی کوشش کی تھی مگر صہیونی حکام کی طرف سے انہیں غزہ سے غرب اردن لے جانے کی اجازت نہیں دی گئی۔

انسانی حقوق کی تنظیم نے صہیونی ریاست کی انتقامی پالیسی کی شدت کے ساتھ مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ اسرائیل ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت غزہ میں بیماروں کی زندگیوں سے کھیل رہا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۰۰۳