قبلہ اول کی بار بار بے حرمتی ناقابل برداشت: اردن




اردن نے سختی سے خبر دار کیا ہے کہ مسجد اقصیٰ کی مسلسل بے حرمتی سے عالم اسلام کے جذبات مشتعل ہو رہے ہیں۔ قبلہ اول کی بار بار بے حرمتی کے واقعات آگ سے کھیلنے کے مترادف ہے۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ:  اردنی وزیر برائے اوقاف اور مذہبی امور ڈاکٹر عبدالناصر ابو البصل نے ایک بیان میں کہا کہ صہیونی ریاست اور یہودی انتہا پسند ایک سوچے سمجھے منصوبے کے تحت مسجد اقصیٰ کا تقدس پامال کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ آئے روز یہودی آباد کار مسجد اقصیٰ، باب المغاربہ، باب الرحمۃ اور باب الرحمۃ قبرستان اور القدس کے دیگر اسلامی مقامات کی بے حرمتی کرتے ہیں۔

ابو البصل کا کہنا تھا کہ اسرائیل کا فلسطینی شہریوں کو باب الرحمۃ سے قبلہ اول میں داخل ہونے سے روکنا مسلمانوں کے مذہبی امور میں مداخلت کے مترادف ہے۔ یہودی آباد کاروں کی طرف سے حال ہی میں وقف شدہ اموی محلات، دیوار براق اور دیگر مقامات کی بے حرمتی کی گئی۔ انتہا پسند یہودی روزانہ کی بنیاد پر قبلہ اول کی بے حرمتی کرتے ہیں اور مسلمانوں پر تشدد کے مرتکب ہوتے ہیں۔ اسرائیلی ریاست اور اس کے سیکیورٹی ادارے یہودی انتہا پسندوں کو قبلہ اول پریلغار کے لیے فول پروف سیکیورٹی مہیا کرتے ہیں۔

اردنی وزیر نے قبلہ اول کی بے حرمتی اور اس کے نتیجے میں مسلمانوں میں پائے جانے والے غم و غصے کے سنگین نتائج کی تمام تر ذمہ داری اسرائیل پرعاید کی اور کہا کہ اسرائیل کو قبلہ اول کی بے حرمتی سے ہرصورت میں باز آنا ہوگا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد,خ,۱۰۰۰۳