اردنی وزیرہ کے ذریعے اسرائیلی پرچم پاؤں تلے روندے جانے پر صہیونی ریاست کا اظہار برہمی




اردنی وزیرہ کےہاتھوں اسرائیلی پرچم کی توہین کی تصاویر سوشل میڈیا پر بڑے پیمانے پر مشتہر کی جا رہی ہیں۔ صہیونی صحافتی اور سیاسی حلقوں کی طرف سےاس پر شدید رد عمل سامنے آیاہے۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، اردن کی ایک خاتون وزیرہ کی جانب سے اسرائیلی پرچم پاؤں تلے روندے جانے پر صہیونی ریاست نے عمان کے خلاف سخت غم وغصے کا اظہار کیا ہے۔

اسرائیلی حکومت نے ایک بیان میں کہا ہے کہ اردنی وزیرہ جمانہ غنیمات نے دانستہ طورپر صہیونی پرچم کی توہین کی ہے۔ سوشل میڈیا پرایک تصویر وائرل ہوئی ہے جس میں جمانہ غنیمات کو ایک یونین کے دفتر میں‌ داخل ہوتے ہوئے صہیونی پرچم کو پائوں تلے روندتے دیکھا جاسکتا ہے۔

عبرانی اخبار”یدیعوت احرونوت” کےمطابق وزیرہ جمانہ غنیمات نے دانستہ طورپر اسرائیلی پرچم کی توہین کی ہے۔ اخباری رپورٹ کے مطابق اسرائیلی پرچم کی ایک وزیر کے ہاتھوں توہین اردنی  وزیراعظم عمر الرزاز کی حکومت کے لیے سوالیہ نشان ہے۔

اردنی وزیرہ کےہاتھوں اسرائیلی پرچم کی توہین کی تصاویر سوشل میڈیا پر بڑے پیمانے پر مشتہر کی جا رہی ہیں۔ صہیونی صحافتی اور سیاسی حلقوں کی طرف سےاس پر شدید رد عمل سامنے آیاہے۔

۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۰۰۳