اسرائیل کے غزہ پر شدید حملے، ۲۴ فلسطینی شہید




اسرائیلی ذرائع کے مطابق صہیونی فوج نے تاحال غزہ پٹی کے ۳۲۰ علاقوں کو حملوں کا نشانہ بنایا اور ۲۴ افراد کو شہید کر دیا ہے۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، گزشتہ دو روز سے جاری غزہ کی پٹی پر صہیونی ریاست کی جانب سے جارحیت کے نتیجے میں تاحال ۲۴ فلسطینی شہید ہو چکے ہیں جن میں تین عورتیں اور تین بچے بھی شامل ہیں۔ جبکہ ۱۵۴ افراد کے زخمی ہونے کی خبریں ہیں۔

دوسری جانب فلسطین کے مزاحمتی گروہوں نے بھی جوابی کاروائی کے دوران گزشتہ ۴۸ گھنٹوں میں ۶۰۰ سے زائد راکٹ صہیونی علاقوں پر داغے ہیں جن کے نتیجے میں کئی اسرائیلی ہلاک ہوئے ہیں۔

اسرائیلی ذرائع کے مطابق صہیونی فوج نے تاحال غزہ پٹی کے ۳۲۰ علاقوں کو حملوں کا نشانہ بنایا اور ۲۴ افراد کو شہید کر دیا ہے۔

یہ ایسے حال میں ہے کہ امریکی صدر نے فلسطینی عوام کو مخاطب کر کے کہا ہے کہ اسرائیل کے خلاف تمہارے یہ اقدامات بہت گراں تمام ہوں گے۔ ڈونلڈ ٹرمپ کے غزہ کے عوام پر اسرائیل کے قاتلانہ حملوں کو نظر انداز کرتے ہوئے اپنے ٹویٹر پیج پر لکھا: ایک بار پھر اسرائیل حماس اور جہاد اسلامی کے راکٹ حملوں کی زد میں واقع ہو گیا ہے ہم سو فیصد اسرائیل کا دفاع کریں گے۔

فارس

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم ش/۱۰۳