اسرائیلیوں کا غزہ کے خلاف جنگ میں اپنی شکست کا اعتراف




صہیونی ذرائع ابلاغ نے اعتراف کر لیا ہے کہ غزہ کی پٹی پر حالیہ جنگ میں اسرائیل کو شکست کا سامنا ہوا ہے۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، فلسطین الیوم نے خبر دی ہے کہ صہیونی میڈیا نے غزہ کے خلاف کی گئی حالیہ سہ روزہ جنگ میں اسرائیل کو شکست کا سامنا ہوا ہے۔
اس رپورٹ کی بنا پر اخبار “یدیعوت احارانوت” نے صہیونی فوجی عہدیداروں سے نقل کرتے ہوئے لکھا ہے: تقریبا ۷۰۰ میزائل غزہ کی جانب سے مقبوضہ علاقوں پر داغے گئے جس کے نتیجے میں پانچ اسرائیلیوں کے ہلاک ہونے کے علاوہ دسیوں زخمی ہوئے اور مزید بھاری نقصان بھی ہوا ہے۔
اس اخبار نے مزید لکھا ہے کہ یہ تمام نقصانات اسرائیل کی دفاعی قوت کے ناکارہ ہونے کی وجہ سے ہوئے ہیں اور تین دن جنگ کے بعد تل ابیب کو آخر کار حماس اور دیگر مزاحمتی گروہوں کے مطالبات کے سامنے جھکنا پڑا ہے۔
ایک اور صہیونی نیوز ایجنسی ۰۴۰۴ نے لکھا ہے: ایسے شرائط میں جنگ بندی کا مطلب یہ ہے کہ اسرائیل بغیر کچھ حاصل کئے اور مقبوضہ علاقوں میں فلسطینی مزاحمتی گروہوں کی جانب سے داغے گئے میزائلوں کے ذریعے ہونے والے نقصانات کے باوجود، جنگ بندی کے لیے جھک گیا اور اس کا مطلب یہ ہے کہ فلسطینی مزاحمتی گروہ پہلے سے کہیں زیادہ طاقتور ہو گئے ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/خ/۱۰۳