بھارت اسرائیل روابط میں بھارتی یہودیوں کا کردار





صہیونی ریاست کی تشکیل کے بعد ہندوستان سے کئی ہزار یہودیوں نے مقبوضہ فلسطین کوچ کیا۔ یہودیوں کی یہ تعداد اگر چہ ہندوستانی آبادی کے لحاظ سے انتہائی اقلیت میں تھی لیکن سیاسی اور اقتصادی نفوز کے اعتبار سے ہندوستان میں کافی اثر و رسوخ کی حامل تھی مقبوضہ فلسطین ہجرت کے بعد انہوں نے ہندوستان سے اپنا رابطہ ختم نہیں کیا بلکہ بھارت اور اسرائیل کے درمیان تعلقات کو مضبوط بنانے کی مساعی شروع کی۔
ہندوستان کے یہودی تین گروہوں میں تقسیم ہوتے تھے: بنی اسرائیل، کوچینی اور بغدادی۔
ہندوستان کے یہودی معاشرے میں ایسی تنظیمیں اور مراکز پائے جاتے ہیں جو صہیونی ریاست کی حمایت اور ہندوستان کے ساتھ تجارتی لین دین میں موثر کردار ادا کر رہے ہیں۔
بھارت اسرائیل روابط کو اسی تناظر سے دیکھا جا سکتا ہے۔ آج ہندوستان جو فوجی ساز و سامان اور جدید ترین جنگی ہتھیاروں کے میدان میں اسرائیل کا سب سے بڑا خریدار ہے اس کی ایک اہم وجہ بھارتی یہودی مہاجروں کا ہندوستان میں اثر و رسوخ ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/۱۰۳