غزہ سرحد پر موجود اسرائیلی فوج سخت ڈپریشن کا شکار




خیبر صہیون تحقیقاتی سینٹر کے مطابق، اسرائیلی اخبار ’یدیعوت احرونوت‘ نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ غزہ کی سرحد پر ڈیوٹی دینے والے اسرائیلی فوجی نفسیاتی طور پر سخت ڈپریشن کا شکار ہیں اور ان کے اندر فوج میں ملازمت کرنے کا بالکل شوق نہیں رہا ہے۔ اس اخبار نے لکھا ہے کہ غزہ […]



خیبر صہیون تحقیقاتی سینٹر کے مطابق، اسرائیلی اخبار ’یدیعوت احرونوت‘ نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ غزہ کی سرحد پر ڈیوٹی دینے والے اسرائیلی فوجی نفسیاتی طور پر سخت ڈپریشن کا شکار ہیں اور ان کے اندر فوج میں ملازمت کرنے کا بالکل شوق نہیں رہا ہے۔

اس اخبار نے لکھا ہے کہ غزہ سرحد پر موجود اسرائیلی فوج ۱۸ سال سے حماس کے میزائلوں کا مقابلہ کر رہے ہیں جس کی وجہ سے ان کے حوصلے پست ہو چکے ہیں اور اب وہ مزید کسی جنگ کے لیے آمادہ نہیں ہیں۔

اس اخبار کے مطابق اسرائیل کے فوجی سربراہان اس موضوع سے سخت پریشان ہیں اور انہوں نے غزہ سرحد کی صورتحال کے حوالے سے کئی میٹنگیں بھی کی ہیں۔ بعض فوجیوں کے نفسیات اس حد تک متاثر ہو چکے ہیں کہ وہ اب فوج میں مزید نوکری کرنے سے گریز کر رہے ہیں۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد,۱۰۳