اسرائیلی پولیس کا بیت المقدس میں فلسطینی نوجوان پرسرعام وحشیانہ تشدد




قابض فوج نے جمعہ کو علی الصباح مقبوضہ بیت المقدس میں کے ایک نوجوان مرد کو العیسویہ میں بے دردی سے حملہ کرنے کے بعد اسے تشدد کا نشانہ بنایا اور اسے حراست میں لے لیا گیا۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، قابض صہیونی فوج کے ہاتھوں مقبوضہ بیت المقدس میں ایک نہتے فلسطینی نوجوان پر وحشیانہ تشدد کی ویڈیو سامنے آئی ہے جس میں کئی درندہ صفت قابض فوجی ایک فلسطینی نوجوان پر وحشیانہ تشدد کررہے ہیں۔

قابض فوج نے جمعہ کو علی الصباح مقبوضہ بیت المقدس میں کے ایک نوجوان مرد کو العیسویہ میں بے دردی سے حملہ کرنے کے بعد اسے تشدد کا نشانہ بنایا اور اسے حراست میں لے لیا گیا۔

انٹرنیٹ پر شائع ہونے والی ایک ویڈیو میں دکھایا گیا ہے کہ اسرائیلی فوج اہلکار فلسطنی نوجوان لیث درویش کو اس کے سر میں شدید ضربیں لگا رہے ہیں۔ اس کے ہاتھ باندھ دیئے گئے ہیں اور اسے بری طرح زدو کوب کیا جا رہا ہے۔

بیت المقدس کے ذرائع کے مطابق اسرائیلی فوج درویش کو تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد حراست میں لے کرنا معلوم مقام پر لے گئی ہے۔

قابل ذکر بات یہ ہے کہ قابض فوج نے دو مہینے سے زیادہ عرصہ میں عیسویہ کے نوجوانوں کے خلاف بڑے پیمانے پر گرفتاریوں کی مہم چلا رکھی ہے جہاں اس مہم کے دوران قابض فوج کے سیکڑوں نوجوانوں کو  حراست میں لیا یا انہیں تشدد کا نشانہ بنایا ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد؍۱۰۳