فلسطینی مجاہدین قبلہ اول کے دفاع کے لیے سر بہ کفن ہیں




فلسطین کے بہادر مجاھدین قبلہ اول کے دفاع کے لیے سر بہ کفن ہیں اور مقدس مقام کے لیے ہر طرح کی قربانی دینے کے لیے تیار ہیں۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، اسلامی تحریک مزاحمت ‘حماس’ نے مسجد اقصیٰ میں یہودی آباد کاروں کے دھاووں اور مقدس مقام کی مجرمانہ بے حرمتی کو مذہبی اشتعال انگیزی اور صہیونیوں کی آگ سے کھیلنے کے مترادف قرار دیا۔

حماس کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ یہودی لیڈرشپ کی قیادت میں انتہا پسند یہودیوں کا مسجد اقصیٰ میں گھس کر مقدس مقام کی بے حرمتی کرنا ناقابل قبول ہے اور فلسطینی قوم اس سنگین جرم پرخاموش نہیں رہے گی۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ فلسطین کے بہادر مجاھدین قبلہ اول کے دفاع کے لیے سر بہ کفن ہیں اور مقدس مقام کے لیے ہر طرح کی قربانی دینے کے لیے تیار ہیں۔

حماس کی طرف سے یہ بیان مسجد اقصیٰ میں ۸ اکتوبر ۱۹۹۰ء کو اسرائیلی فوج کے ہاتھوں ہونے والے وحشیانہ قتل عام کی یاد میں جاری کیا گیا۔

حماس نے خبردار کیا کہ ماضی کی نسبت مسجد اقصیٰ زیادہ خطرے میں ہے۔ عالم اسلام کو قبلہ اول کے دفاع کے لیے فوری حرکت میں آنا ہوگا۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد؍۱۰۳