اسرائیل اور متحدہ عرب امارات عراق میں بدامنی بڑھانے کے خواہاں




عصائب اہل الحق تحریک کے سیکرٹری جنرل نے اپنے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ صہیونی ریاست امریکہ سے زیادہ اور متحدہ عرب امارات سعودی عرب سے زیادہ عراق میں بدامنی پھیلانے کے خواہاں ہیں۔



خیبر صہیون تحقیقاتی ویب گاہ کے مطابق، “قیس الخزعلی” نے العراقیہ چینل کو دئے گئے اپنے انٹریو میں عراق کی حالیہ صورت حال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ عراق میں پائی جانے والی موجودہ صورتحال، بدامنی اور پرتشدد مظاہرے بعض بیرونی عناصر کی دخالت کی وجہ سے ہیں۔
انہوں نے اپنے انٹرویو میں کہا: غیر ملکی عوامل دخالت کے بارے میں جو معلومات ہمیں حاصل ہوئی ہیں وہ انتہائی خطرناک ہیں۔
عصائب اہل الحق تحریک کے سیکرٹری جنرل نے مزید کہا: میں احتجاجی مظاہرے کرنے والوں سے کہتا ہوں کہ اپنے اعتراضات جاری رکھیں لیکن تخریبکاروں کو اجازت نہ دیں کہ وہ توہین کریں اور سیکورٹی دستوں پر حملے کریں۔
انہوں نے مزید کہا: کہ تظاہرات میں شرکت کرنے والے بعض افراد کے پاس اسلحہ موجود ہوتا ہے جو پرامن مظاہروں کے منافی ہے۔
الخزعلی نے کہا: الحشد الشعبی سیکورٹی دستوں پر ایسے حال میں حملے کئے گئے کہ ان کی حکومت میں کوئی نمائندگی نہیں ہے۔

۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔

ختم شد/۱۰۳